معروف پاکستانی خاتون صحافی کو چالاکی مہنگی پڑ گئی

آستانہ(نیوزڈیسک)معروف پاکستانی خاتون صحافی کو چالاکی مہنگی پڑ گئی،بھارتی وزیراعظم مودی کے محافظوں نے دبوچ لیا،افسوسناک صورتحال، تفصیلات کے مطابق شنگھائی تعاون تنظیم کے اجلاس میں پاکستان کی جانب سے بھی صحافیوں نے بھی شرکت کی۔اجلاس کے موقع پر وزیراعظم محمد نواز شریف اور بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کے درمیان کانفرنس ہال میں دو سے تین منٹ تک ملاقات ہوئی, دونوں وزراء اعظم نے ایک دوسرے سے مصافحہ کیا اور ایک دوسرے کی خیریت دریافت کی اور خوشگوار ماحول میں ایک دوسرے سے گفتگو کی۔شنگھائی تعاون تنظیم کا اجلاس اختتام پذیر ہوچکا ہے۔اجلاس کے بعد جب بھارتی وزیراعظم ہال سے
باہر نکلے اور اپنی گاڑی کی جانب روانہ ہوئے ہی تھے اسی دوران پاکستانی صحافی غریدہ فاروقی نے چالاکی کا مظاہرہ کیا اورنریندر مودی کی سیکورٹی ٹیم کو چکمہ دیکر اچانک مودی کے پاس جا پہنچتیں لیکن اس وقت افسوسناک صورتحال دیکھنے میں آئی جب مودی کے پرسنل سٹاف نے پاکستانی خاتون صحافی کو دبوچ لیا اور زبردستی دوسری جانب لے گئے اور ان کے موبائل کو بھی پکڑ لیا جس سے خاتون صحافی غالباً ویڈیو بنانے کی کوشش کر رہی تھیں۔صحافتی حلقوں نے ایک جانب نریندر مودی کے محافظوں کے جارحانہ رویئے کو تنقید کانشانہ بنایا ہے تو دوسری جانب خاتون صحافی کی جانب سے نامناسب طورپربھارتی وزیراعظم کے قریب جانے کی کوشش پر بھی تنقید کی ہے

اپنا تبصرہ بھیجیں